تحریر : بابرک کارمل جمالی
lafznamaweb@gmail.com

, سبز چنے

بہار کا موسم شروع ہوتے ہی ہی مارکیٹ میں سبز چنے آ جاتے ہیں ۔۔۔۔۔جسے ہم بلوچستان کے باسی پھوٹا بھی کہتے ہیں۔۔۔۔۔۔ جبکہ اکثر احباب چھولیہ کے نام سے بھی پکارتے ہیں۔۔۔۔ جب چھولے کی ڈھالیوں میں سے سبز چنے نکلتے ہیں تو منہ کا ذائقہ ہی بدل جاتا ہے۔۔۔۔۔۔۔ کچے اور نرم چنے کھانے میں انتہائی لذیذ ہوتے ہیں۔۔۔۔۔۔ہرے چنے جو کہ پھلی کے اندر موجود ہوتے ہیں۔۔۔۔ ان کو مٹر کی طرح نکال کر استعمال کیا جاتا ہے۔۔۔۔۔ان کو چھولیا یا ہرے چنے بھی کہا جاتا ہے۔۔۔۔۔

اس کو اکثر لوگ سبزی کے طرح پکاتے ہیں ۔۔۔۔۔ ویسے تو اس کو کچا بھی کھایا جا سکتا ہیں ۔۔۔۔۔مگر اس کو ابال کر نمک ڈال کر کھانے کا اپنا مزہ ہیں۔۔۔۔۔۔سبز چنے میرے شہر کی مشہور سوغات میں ایک ہے۔۔۔۔ سبز چنے (چھولے) وٹامنز سے بھرپور خوش ذائقہ دار سبزیوں میں ایک سبزی ہے۔۔۔۔۔۔۔جس کے بہت سارے فوائدے ہوتے ہے۔۔۔۔۔۔چنے ان افراد کے لیے بہت مفید ہوتے ہیں جو ڈائٹنگ کر رہے ہوتے ہیں۔۔۔۔ اور بار بار لگنے والی بھوک سے پریشان بھی ہوتے ہیں۔۔۔۔

ہرے رنگ کی سبزی ہونے کے سبب ان میں پروٹین کا خزانہ پوشیدہ ہوتا ہے ۔۔۔۔۔۔۔ہرے چنے میں وٹامن اے اور سی بھی بھر پور ہوتا ہے۔۔۔۔۔ہرے چنے وزن کو کم کرننے میں مددگار ثابت ہوتے ہیں۔۔۔۔۔۔ہرے چنے میں شوگر کا لیول بہت کم ہوتا ہے ۔۔۔۔اس لیے شوگر کے مریضوں کے لیے بہت مفید غذا ہے۔۔۔۔۔ آج کل ہرے چنے کا سیزن چل رہا ہے جو بمشکل ایک ماہ تک چلتا ہے۔۔۔

شیئر کریں
ببرک کارمل تعلق بلوچستان پاکستان سے اہل قلم 2000 سے تاحال مسلسل لکھ رہے ہیں۔ تعلیم ایم اے بین الاقوامی تعلقات عامہ . فی الحال ابھی ان کی کوئی کتاب منظر عام پہ نہیں آئی ہے تاہم سینکڑوں افسانے مضامین اور بچوں کی کہانیاںشائع ہو چکی ہیں ۔

کمنٹ کریں