امریکی خاتون نے اسلام کیوں قبول کیا

یورپ میں اسلام
یورپ میں اسلام

امریکی خاتون نے ارطغرل غازی میں ابن عربی کی اسلامی تعلیمات سے متاثر ہو کر اسلام قبول کر لیا
امریکی ریاست وسکونسن سے تعلق رکھنے والی 60 سالہ امریکی خاتون نے اپنا نام تبدیل کر کے خدیجہ رکھ لیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ابن عربی کی اسلامی تعلیمات میں حق اور باطل کا فرق جانا۔ جس کے بعد زندگی کے بارے میں سوچ کا رخ تبدیل ہو گیا۔


نومسلم خدیجہ نے کہا کہ انہیں ترک ڈرامہ سیریل میں نہ صرف ابن العربی اور ارطغرل بلکہ ترگت آلپ اور سلجان کا کردار بھی بہت پسند آیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تاریخ سے ان کے لگاؤ کی وجہ سے انہوں نے یہ ڈرامہ دیکھا اور اس کے ذریعے انہیں اسلام کو پہلے سے زیادہ قریب سے دیکھنے کا موقع ملا ہے۔


خدیجہ نے بتایا کہ انہوں نے کئی بار قرآن کا انگریزی ترجمہ پڑھا اور اس کے فلسفے کو سمجھنے کی کوشش کی ہے اور یہی سمجھا ہے کہ قرآن وحدانیت کا سبق دیتا ہے۔
انہوں نے بتایا کہ نیٹ فلکس پر سکرولنگ کے دوران انہوں نے یہ ڈرامہ دیکھا جسے اب تک وہ 4 بار دیکھ چکی ہیں اور اب وہ پہلی فرصت میں ترکی جانا اور وہاں رہنا چاہتی ہیں۔ انہوں نے مزید بتایا کہ وہ ترک کھانوں کی بھی دلدادہ ہیں اور گھر میِں بنانے کی کوشش بھی کرتی ہیں،ان کے آبا و اجداد ناروے سے امریکہ آکر آباد ہوئے

شیئر کریں
مدیر
مصنف: مدیر
لفظ نامہ ڈاٹ کام کی اداریہ ٹیم کے مدیران کی جانب سے

کمنٹ کریں