روٹھ جانے پر شاعری

روٹھ جانے پر شاعری
روٹھ جانے پر شاعری

روٹھ کے موضوع پر اردو کی بہترین شاعری کا انتخاب پڑھیں اور پسند آنے پر دوستوں سے ساتھ شیئر کریں۔

مجھ کو عادت ہے روٹھ جانے کی
آپ مجھ کو منا لیا کیجے
جون ایلیا

ہائے وہ لوگ ہم سے روٹھ گئے
جن کو چاہا تھا زندگی کی طرح
جاوید کمال رامپوری

ذرا روٹھ جانے پہ اتنی خوشامد
قمرؔ تم بگاڑو گے عادت کسی کی
قمر جلالوی

نہ جانے روٹھ کے بیٹھا ہے دل کا چین کہاں
ملے تو اس کو ہمارا کوئی سلام کہے
کلیم عاجز

یہ کس خطا پہ روٹھ گئی چشم التفات
یہ کب کا انتقام لیا مجھ غریب سے
شکیل بدایونی

اک حرف شکایت پر کیوں روٹھ کے جاتے ہو
جانے دو گئے شکوے آ جاؤ میں باز آیا
ناطق گلاوٹھی

ذرا ذرا سی شکایت پہ روٹھ جاتے ہیں
نیا نیا ہے ابھی شوق دل ربائی کا
جلیل مانک پوری

وہ مجھ سے روٹھ نہ جاتی تو اور کیا کرتی
مری خطائیں مری لغزشیں ہی ایسی تھیں
انور شعور

لے چلا جان مری روٹھ کے جانا تیرا
ایسے آنے سے تو بہتر تھا نہ آنا تیرا
داغؔ دہلوی

مسلسل جاگنے کے بعد خواہش روٹھ جاتی ہے
چلن سیکھا ہے بچے کی طرح اس نے مچلنے کا
اقبال ساجد

شام ہوتی ہے تو لگتا ہے کوئی روٹھ گیا
اور شب اس کو منانے میں گزر جاتی ہے
اشفاق ناصر

زندگی بھر کے لیے روٹھ کے جانے والے
میں ابھی تک تری تصویر لیے بیٹھا ہوں
قیصر الجعفری

کبھی کبھی سفر زندگی سے روٹھ کے ہم
ترے خیال کے سائے میں بیٹھ جاتے ہیں
کوثر جائسی

یوں روٹھ کے جانے پہ میں خاموش ہوں لیکن
یہ بات مرے دل کو گوارا تو نہیں ہے
مہیش چندر نقش

روٹھ کر آنکھ کے اندر سے نکل جاتے ہیں
اشک بچوں کی طرح گھر سے نکل جاتے ہیں
توقیر تقی

مسکرا کر ان کا ملنا اور بچھڑنا روٹھ کر
بس یہی دو لفظ اک دن داستاں ہو جائیں گے
دانشؔ علیگڑھی

انتہائی حسین لگتی ہے
جب وہ کرتی ہے روٹھ کر باتیں
عاصم واسطی

زندگی کٹ گئی مناتے ہوئے
اب ارادہ ہے روٹھ جانے کا
فرحت شہزاد

ایک بچہ سا بے سبب جاذلؔ
بیٹھا رہتا ہے روٹھ کر مجھ میں
جیم جاذل

گھٹن سی ہونے لگی اس کے پاس جاتے ہوئے
میں خود سے روٹھ گیا ہوں اسے مناتے ہوئے
اظہر اقبال


شیئر کریں
مدیر
مصنف: مدیر
لفظ نامہ ڈاٹ کام کی اداریہ ٹیم کے مدیران کی جانب سے
1 Comment

کمنٹ کریں