سیاست پہ اشعار

سیاست کے موضوع پر بہترین اردو شعر و شاعری پڑھنے کے لئے مندرہ ذیل منتخب اشعار پر نظر دوڑائیے۔ سیاسی لیڈروں اور سیاست پر اشعار پڑھیں دشمنی جم کر کرو لیکن یہ گنجائش رہےجب کبھی ہم دوست ہو جائیں تو شرمندہ نہ ہوںبشیر بدر۔ہر آدمی میں ہوتے ہیں دس بیس آدمیجس کو بھی دیکھنا ہو کئی بار دیکھناندا فاضلی۔نئے کردار آتے جا رہے ہیںمگر ناٹک پرانا چل رہا ہےصابر دت ایک آنسو بھی حکومت کے لیے خطرہ ہےتم نے دیکھا نہیں آنکھوں کا سمندر ہونامنور رانا۔کانٹوں سے گزر جاتا ہوں دامن کو بچا کرپھولوں کی سیاست سے میں بیگانہ نہیں ہوںشکیل بدایونی۔یہ سیاست بھی عجب کھیل ہے بھولے… Continue reading سیاست پہ اشعار

انقلاب پر شاعری

شعروادب کی سماجی جڑیں بہت گہری ہیں ۔ شاعری کتنی بھی تجریدی اورتخیلاتی ہوجائے اس کاسماجی سروکار برقرار رہتا ہے ، ساتھ ہی شاعری کا ایک رخ سماج اوراس کے معاملات سے براہ راست مخاطبے کا بھی ہوتا ہے اوریہیں سے شاعری انقلاب کے راستے کی ایک توانا آواز بن کرابھرتی ہے ۔ سماجی تاریخ… Continue reading انقلاب پر شاعری

کاغذ پر شاعری

لکھ کے رکھ دیتا ہوں الفاظ سبھی کاغذ پرلفظ خود بول کے تاثیر بنا لیتے ہیںمحمد مستحسن جامی کبھی میں ڈھلتا ہوں کاغذ پہ نقش کی صورتمیں لفظ بن کے کسی کی زباں میں تیرتا ہوںخاور نقوی ہر لفظ کو کاغذ پہ اُتارا نہیں جاتا​ہر نام سرِعام پکارا نہیں جاتا انعام الحق جاوید​کتابِ قسمت میں کورے کاغذ بھی پائے جاتے ہیں چیدہ چیدہکہ جن میں دَم ہو، وہ اپنے ہاتھوں سے اپنی تقدیر آپ لکھ لیںرحمٰن حفیظ امیرِ شہر نے کاغذ کی کشتیاں دے کرسمندروں کے سفر پر… Continue reading کاغذ پر شاعری

کشتی پر شاعری

کشتی ،ساحل ، سمندر ، ناخدا ، تند موجیں اور اس طرح کی دوسری لفظیات کو شاعری میں زندگی کی وسیع تر صورتوں کے استعارے کے طور پر برتا گیا ہے ۔ کشتی دریا کی طغیانی اور موجوں کی شدید مار سے بچ نکلنے اور ساحل پر پہنچنے کا ایک ذریعہ ہے ۔ کشتی کی… Continue reading کشتی پر شاعری

عقاب پہ اشعار

اڑتا ہوا عقاب تو آنکھوں میں قید ہےاب دیکھیے عقاب کے آگے کچھ اور ہےخورشید طلب عقاب اڑتا ہے جس طرح آسمانوں میںبلندیوں میں کیا کرتا ہوں سفر تنہاجاوید جمیل ہر قدم کوئی درندہ کوئی خونخوار عقابشہر کی گود میں آباد ہیں جنگل کتنےرفیعہ شبنم عابدی کبوتروں پہ جھپٹنے کی خو کہاں ان میںکہ یہ… Continue reading عقاب پہ اشعار

دسمبر پر اشعار

اک شہر فرنگاں ہے اور ماہِ دسمبر ہےمشکل سبھی رستے ہیں موسم بھی ستمگر ہےانیس فاروقی دسمبر میں کہا تھا ناں کہ واپس لوٹ آؤ گے​ابھی تک تم نہیں لوٹے دسمبر لوٹ آیا ہے نامعلوم دسمبر کی شب آخر نہ پوچھو کس طرح گزرییہی لگتا تھا ہر دم وہ ہمیں کچھ پھول بھیجے گانامعلوم دسمبر کی… Continue reading دسمبر پر اشعار

عزت پر شاعری

شہر سخن میں ایسا کچھ کر عزت بن جائےسب کچھ مٹی ہو جاتا ہے عزت رہتی ہےامجد اسلام امجد آپ کی کون سی بڑھی عزتمیں اگر بزم میں ذلیل ہوامومن خاں مومن جس کو چاہیں بے عزت کر سکتے ہیںآپ بڑے ہیں آپ کو یہ آسانی ہےماجد دیوبندی مانگنے والوں کو کیا عزت و رسوائی… Continue reading عزت پر شاعری

آنکھوں پر شاعری

آنکھ انسانی جسم کا مرکزی حصہ ہے ۔ اس عضو کی افادیت صرف دیکھنے کی حد تک ہی نہیں بلکہ اس سے آگے بھی اس کے متنوع اور رنگا رنگ کردار ہیں ۔ عشق کے بیانیے میں یہ کردار اور زیادہ دلچسپ ہوجاتے ہیں ۔ شاعروں نے محبوب کی آنکھوں اور ان کی خوبصورتی کو… Continue reading آنکھوں پر شاعری

گناہ لفظ پہ شعر

گناہ ایک خالص مذہبی تصور ہے لیکن شاعروں نے اسے بہت مختلف طور سے لیا ہے ۔ گناہ کا خوف میں مبتلا کر دینے والا خیال ایک خوشگوار صورت میں تبدیل ہوگیا ہے ۔ یہ شاعری آپ کو گناہ ، ثواب ،خیر وشر کے حوالے سے بالکل ایک نئے بیانیے سے متعارف کرائے گی۔ کوئی سمجھے تو ایک بات کہوںعشق توفیق ہے گناہ نہیںفراق… Continue reading گناہ لفظ پہ شعر

صنم پہ شاعری

ایک کعبہ کے صنم توڑے تو کیانسل و ملت کے صنم خانے بہتحبیب احمد صدیقی مرہم ترے وصال کا لازم ہے اے صنمدل میں لگی ہے ہجر کی برچھی کی ہول آجسراج اورنگ آبادی صنم کس بند سیں پہنچوں ترے پاسہزاروں بند ہیں تیری قبا کےسراج اورنگ آبادی صنم پہ شاعری صنم پرستی کروں ترک… Continue reading صنم پہ شاعری